اردو کے عظیم شاعر مرزا غالب کو گوگل کا خراجِ تحسین

دنیا کی سب سے بڑہ سرچ انجن گوگل نے اردو اور فارسی کے عظیم شاعر مرزا غالب کو ان کے 220 ویں یوم پیدائش کے موقع پر زبردست خراج تحسین پیش کرتے ہوئے نیا ڈوڈل متعارف کرادیا۔

مرزا غالب 27 دسمبر 1797 کو بھارت کے شہر آگرہ میں پیدا ہوئے، ان کا اصل نام اسد اللہ بیگ تھا، نرزا غالب 5 سال کی عمر میں ہی یتیم ہو گئے تھے۔ 1890 میں 13 سال کی عمر میں ان کی شادی نواب احمد بخش کے چھوٹے بھائی مرزا الہٰی بخژ کی بیٹی امرا بیگم سے ہو گئی جس کے بعد انہوں نے اپنے آبائی وطن کو خیر باد  کہہ کر دہلی میں مستقل سکونت اختیار کر لی۔



شاعری ہو یا نثر نگاری، انشا پردای ہو یا خطوط نویسی، غالب نے ہر شے میں منفرد اور رنگین جدتیں پیدا کیں، غالب کو مشکل سے مشکل موضوعات کو نہایت سادگی سے بیان کرنے پر عبور حاصل تھا، فارسی اور اردو شاعری کے نوشہ میاں کے قلم کا ہی اعجاز ہے کہ آج اردو زبان دنیا کی چوتھی بڑی زبان ہے۔

غالب کی عظمت کا راز صرف ان کی شاعری کے حسن اور بیان کی خوبی ہی میں نہیں ہے، ان کا اصل کمال یہ ہے کہ وہ زندگی کے حقائق اور انسانی نفسیات کو گہرائی میں جا کر سمجھتے تھےاور بڑی سادگی سے عام لوگوں کے لیے بیان کر دیتے تھے، غالب سے پہلے اردو شاعری دل و نگاہ کے معاملات تک محدود تھی، غالب نے اس میں فکر اور سوالات کی آمیزش کر کے اسے دو آتشہ بنا دیا۔



اگرچہ نثر کے میدان میں غالب نے کوئی فن پارا تخلیق نہ کیا لیکن منفرد انداز سے خط نگاری کی اور یوں غالب کے خطوط اپنے لب و لہجے، اندازِ بیان، لفظوں کے انتخاب اور نثر میں شاعرانہ انداز کے باوصف اردو ادب کا وہ شاندار سرمایہ ہے جسے ان کے انتقال کے بعد یکجا کیا گیا۔
مرزا غالب 15 فروری 1869 کو دہلی میں جہاں فانی سے کوچ کر گئے، لیکن جب تک اردوشاعری زندہ ہے، غالب کا نام زندہ رہے گا۔