ڈرامہ سیریل “میرا مان رکھنا” قسط نمبر:4

ٹی وی ون سے بدھ کی رات 8:00بجے نشر کی گئی ڈرامہ سیریل “میرا مان رکھنا “کی چوتھی قسط میں مومنہ کے شوہر سجاد کا کمزور کردار مزید کھل کر سامنےآیا ہے ۔سجا کی بہن ثمینہ اُس سے ہر وہ بات منوارہی ہے جس کی اجازت گھر کی سربراہ فریدہ بیگم نے کبھی کسی کو نہیں دی تھی ۔مومنہ اور مریم دونوں ماں بیٹیاں ثمینہ کی من مانی دیکھ رہی ہیں اور بے بسی سے ہاتھ مل رہی ہیں ۔

کہانی میں دلچسپی کا نیا پہلو یہ آیا ہے کہ اسد کا دوست موہت مریم اور فارس کی منگنی سے بہت اپ سیٹ ہے اور اسے اس بات کا شدید افسوس ہے کہ اس اور مریم کسی نے بھی اسے اس منگنی کی اطلاع نہیں دی ۔ وہ مریم سے شاکی ہے کہ اُس نے میری محبت اور میرے جذبات کی پروا کیے بغیر خاموشی کے ساتھ فارس کی انگوٹھی پہن لی ۔اُدھر مومنہ کی بیوہ جٹھانی فوزیہ شدید غم وغصے میں مبتلا اور اپنی ساس اور نند سے ناراض ہے کہ اُنھون نے فارس کے لیے اس کی بیٹی امل کی جگہ مومنہ کی بیٹی مریم کو دے دی ہے ۔فوزیہ کو اپنی بیٹی امل کی یہ بات بھی زہر لگتی ہے کہ اس کی بیٹی امل مریم اور اس کے بھائی اسد کی کیوں حمایت کرتی ہے ۔

فوزیہ اپنے بیٹے شیراز سے بھی جھوٹ کہتی ہے کہ تمہاری دادی تمہارا رشتہ مریم سے کرنا چاہتی تھی مگر مومنہ اور سجاد نے گڑبڑ کردی اور اپنی بیٹی کی منگی فارس سے کردی ۔موہت مریم کی طبیعت پوچھنے اس کے گھر آتا ہے اور دادی فریدہ کو یہ بات بالکل اچھی ہیں لگتی ۔ یہاں موہت کی ملاقات فارس سے ہوتی ہے جو اُسے خبر دیتا ہے کہ میری مریم سے منگنی ہوگئی ہے اور میں تمہارے دوست اسد کا ہونے والا بہنوئی ہوں ۔ موہت یہ جان کر شاکڈ ہو جاتا ہے ۔