ڈرامہ سیریل نولکھا: ماں نے بیٹی کا ہنستا بستا گھر ویران کر دیا۔۔۔

غلطی تو انسان ہی کرتا ہے  اورشاید ہی اس دنیا میں کوئی ایسا شخص ہو جس نے کبھی غلطی سے غلطی نہ کی ہو۔  لیکن اگر کسی سے غلطی ہوجائے اور وہ انسان اپنے کئے پر شرمندہ ہو تو اسے معاف کرنے والے کا ظرف اس سے بھی بلند ہو جاتا ہے۔  ڈرامہ سیریل نولکھا کی نئی قسط میں ایسے ہی مناظر دیکھنے میں آئے کہ جب  زین تحریم کو فون کرکے واپس آنے کا کہتا ہے ، تحریم زین کی غلطی معاف کرتے ہوئے اس کے ساتھ جانے کافیصلہ کرتی ہے۔

ضرور پڑھیں: ڈرامہ سیریل نولکھا: کیا زین تحریم کو حویلی میں واپس لانے میں کامیاب ہو پائے گا؟

ڈرامہ کے آغاز میں زین تحریم کو  حماد کے ساتھ کھڑا دیکھ کر اندر ہی اندر کڑھتا رہتا ہے۔ شفق زین کے ذہن میں یہ بات ڈالنے کی کوشش کرتی ہے کہ وہ تحریم کا کوئی بہت قریبی ہو سکتا ہے کیوں کہ اس کے تمام دوستوں میں بخوبی جانتی ہوں۔ زین شفق کی اس بات پر کان دھرنے سے گریز کرتا ہے۔  زین تحریم کو فون کر کے اسے واپس آنا کہتا اور تحریم واپس آنے کے لیے راضی ہوجاتی ہے۔

ضرور پڑھیں: ڈرامہ سیریل نولکھا: کیا تحریم زین کو چھوڑ کر حماد کا ہاتھ تھامے گی؟

زین خوشی خوشی تحریم لینے اس کے گھر پہنچتا ہےا ور اسے لیکر واپسی کی راہ لیتا ہے۔ راستے میں زین تحریم سے سوال کرتا ہے  کیا تم نے نولکھا رکھ لیا ہے؟ جس کے جواب میں تحریم اسے کہتی ہے کہ میں نولکھا رکھنا بھول گئی ہوں ، لیکن میں بعد میں لے آوں گی اسی بات کو لیکر ان دونوں کے درمیان تکرار ہو جاتی ہے ۔ اسی دوران  زین کو فون آتاہ ے کہ نائل کی طبیعت خراب ہوگئی ہے  اور وہ اسے لیکر ہسپتال روانہ ہورہے ہیں۔

ضرور پڑھیں: ڈرامہ سیریل نولکھا: شفق کو ایک بار پھر تکلیف اور کرب کا سامنا… مگر کیوں؟؟

زین تحریم کو گاڑی سے اتار دیتاہے اور تحریم گھر واپس چلی جاتی ہے۔  تحریم کے والد ممتاز پر سخت خفا ہوتے ہیں کہ  تم نے صرف نولکھا حاصل کرنے کی وجہ سے اپنی بیٹی کا ہنستا بستا گھر اجاڑ دیا۔ سجاد ساتھ میں یہ اعلان بھی کر دیتے ہیں کہ اب  تحریم حویلی واپس نہیں جائے گی۔ ۔۔۔